Shop Grocery (USA) | Shop Henna | Shop Spices | Beauty Shop | Join | Sign In | Submit Recipe

New & Improved Search Helps You Find Even More Recipes & Videos!


Articles >> Chefs and Experts articles > Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں

Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں

Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں
Tahir Chaudhry is most popular chef due to unique style of cooking. Special talk of Shazia Anwar with expert of "Cooking on a Budget".
Viewed: 8568
Source:  Interview of Chef Tahir Chaudhry
8 Ratings
4 out of 5 stars
 Rate It

  • ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں

  • کچھ اپنے خاندانی پس منظر کے بارے میں بتائیں؟

  • طاہر چوہدری: میں نے 1987ء میں ناصرہ اسکول سے میڑک اور سندھ مدرستہ السلام سے اِنڑمیڈیٹ کیا۔ میرے والد ائیر فورس میں ملازم تھے۔ انہوں نے میرے بڑے بھائی کو ڈاکڑ اور چھوٹے بھائی کو انجینئر بنایا جب کہ مُچھے اُنہوں نے ڈینٹل سرجن بنانے کا فیصلہ کرتے ہوئے بقائی میڈیکل کالج میں میرے کاغذات جمع کرادیئے اور فیس بھی ادا کردی لیکن اسی دن مجھے باہر سے تعلیم حاصل کرنے کی آفر آگئی۔ میں نے باہر جانے پر اِصرار کیا۔ گوکہ مجھے کہا گیا کہ آپ کو باہر جانے کے لئے پیسے نہیں ملیں گے لیکن میں نے پرواہ نہیں کی۔ پاکستان سے باہر جا کر میں نے سینڑل امریکہ، امریکہ، اٹلی، سنگاپور، جکارتہ، تھائی لینڈ اور مڈل ایسٹ ممالک، وغیرہ سے تعلیم حاصل کی اور کُوکنگ کے شعبے میں اپنا مستقبل بنایا۔

  • بچپن کیسا گزرا؟

  • طاہر چوہدری: میرا بچپن بہت عام سا گزرا کیوں کہ میں شاید عام سے بھی گیا گزرا بچہ تھا۔ مجھے کبھی بھی اپنا بوجھ گھر والوں پر ڈالنا پسند نہیں رہا، میڑک سے ہی میں نے ذاتی اخراجات پورے کرنے کے لیے ٹیوشنز پڑھانی شروع کردی تھیں۔

  • کھانا پکانے کے شعبے کی جانب آنے کا خیال کیوں کر آیا؟

  • طاہر چوہدری: اس حوالے سے میرے بہنوئی نے میری بھرپور رہنمائی کی اور کہا کہ مجھے مڈل ایسٹ جاکر کھانا پکانے کے شعبے سے وابستہ ہونا چاہئے کیوں کہ اس شعبے میں آگے بڑھنے کے بہت روشن امکانات ہیں۔

  • تربیتی مراحل کیسے طے کئے اور وطن واپسی کے بعد کیا کچھ کیا؟

  • طاہر چوہدری: میں نے پیشہ ورانہ تعلیم حاصل کرنے کے بعد 1990ء میں انڑکانٹینینٹل (Intercontinental) ہوٹل دوبئی سے کام کا آغاز کیا، اپنے کام سے دلچپسی اور آگے بڑھنے کی لگن نے مجھے جلد ہی دیگر لوگوں میں نمایاں کردیا۔ بعدازاں میں ہالی ڈے اِن (holiday inn) کراؤن پلازہ دوبئی، سنگاپور، یورپ اور جکارتہ کے مختلف ہوٹلوں میں کام کرتا رہا۔ 1998ء میں پاکستان واپسی کے بعد جب میں نے اسسٹنٹ ایگزیکٹو (assistant executive) شیف کی حیثیت سے کام شروع کیا تو مجھے اس بات کا احساس ہوا کہ میں اس عہدے پر تو فائز ہوگیا ہوں مگر اس ذمہ داری کو نبھانے کے لئے میرے پاس مزید علم ہونا چاہئے چنانچہ میں مزید تعلیم کے حُصول کے لئے 1999ء میں امریکہ واپس چلا گیا اور نیویارک اسکول آف ہوٹل مینجمنٹ اینڈ ریسٹورنٹ کو جوائن کیا۔ وہاں مجھے مزہ نہیں آیا تو میں نے فرنچ کولنری انسٹیٹیوٹ آف امریکہ (French Culinary Institute of America) سے وابستگی اختیار کی اور وہاں سے کولنری (culinary) کی ڈگری حاصل کی۔ اس کے بعد میں ریسٹورنٹ مینجمنٹ میں ماسٹرز ڈگری کے حصول کے لئے کارنل (cornell) یونیورسٹی سے وابستہ ہوا۔ میں 2005ء میں پاکستان واپس آیا اور 2006ء میں ہاشو گروپ جوائن کیا، میری خدمات پی سی زیور گوادر کے ایگزیکٹو شیف کی حیثیت سے حاصل کی گئیں۔ بعد ازاں میں نے میریٹ کراچی میں ایگزیکٹو شیف اور نیشنل فوڈز میں کارپوریٹ ایگزیکٹو شیف ریسرچ اینڈ ڈیولپمنٹ کی حیثیت سے کام کیا۔ پھر میں نے اپنا بزنس شروع کرنےکا فیصلہ کرتے ہوئے "تارہ فوڈز پرائیوٹ لمیٹڈ" کی بنیاد رکھی۔ میں اس وقت سے مختلف فوڈ کمپینوں اور ہوٹلوں کو فوڈ سیلوشن فراہم کر رہا ہوں۔

  • بحیثیت کنسلٹنٹ اب تک کتنے پراجیکٹس پر کام کیا ہے؟

  • طاہر چوہدری: میں نے 2009ء میں اپنا کنسلٹنٹ بزنس شروع کیا اور اب تک نو بڑے منصوبوں پر کام کرچکا ہوں جس میں ڈالمن مال طارق روڈ کا فوڈ کورٹ، برک گروپ اور ڈیلی چکن کے کامیاب پراجیکٹس شامل ہیں۔

  • اپنا بھی کوئی ریسٹورنٹ قائم کیا ہے؟

  • طاہر چوہدری: جی ہاں! میں نے ڈالمن مال (dolmen mall) میں"لزارو Lazaro" کے نام سے اپنا ریسٹورنٹ کھولا ہے۔ میں نے سوچا کہ مختلف طرح کی فرنچائز بنانی چاہئے جہاں نچلے، متوسط اور اعلی طبقے کے لوگوں کو نظر میں رکھ کر مینو ترتیب دیا جائے۔ اس ریسٹورینٹ میں ہم نے اٹالین کھانے پیش کئے ہیں۔ پہلی برانچ کراچی میں قائم کرنےکے بعد میرا ارادہ اسے پورے ملک میں پھیلانے کا ہے۔

  • "لزارو" کا کیا مطلب ہے؟

  • طاہر چوہدری: "لزارو" 200 قبل مسیح پُرانا رومن لفظ ہے۔ اس کا مطلب ہے الّلہ تعالی کی مدد، "لزارو" کے قیام کا مقصد ہے کہ کوئی بھوکا نہ رہے۔ میری کوشش ہے کہ ایک آدمی 100 روپے میں پیٹ بھر کر کھانا کھا لے۔

  • کُوکنگ آن بجٹ کے حوالے سے کچھ بتایئے؟

  • طاہر چوہدری: کُوکنگ آن بجٹ جس کے گزشتہ دنوں 200 شوز مکمل ہو چکے ہیں، میرا مقصد عوام کو کم پیسوں میں اچھا کھانا سکھانا ہے۔ میرا ماننا ہے کہ اگر قوم تندرست ہوگی تو اُ ن کی سوچ اچھی ہوگی، بیمار ذہن اچھی قوم نہیں بناسکتی۔

  • سنا ہے کہ آپ تیار مصالحے مارکیٹ میں لے کر آرہے ہیں؟

  • طاہر چوہدری: میں ہر خاندان کے لئے مہنگائی سے مقابلہ کرنے کا ایک حل لے کر آرہا ہوں یعنی بہت کم قیمت پر "تارہ مصالحے" متعارف کرا رہا ہوں۔

  • کیا کُوکنگ چینل معاشرے میں تبدیلی لانے کا سبب بنے ہیں؟

  • طاہر چوہدری: کُوکنگ چینل بالخصوص "مصالحہ" نے بہت محنت سے لوگوں کی تربیت کی ہے۔ اس چینل نے عوام کی تربیت کے لئے اب تک بہت کچھ کیا ہے تاہم انہیں کچھ ایجوکیشنل پروگرام کرنے ہوں گے۔ ابھی ہم جو کچھ سِکھار ہے ہیں وہ ایجوکیشنل پروگرام نہیں بلکہ کُوکنگ سکھانے کے پروگرام ہیں جہاں شیفس اپنی بساط کے مطابق تھوڑا بہت کام سِکھا رہے ہیں تاہم ہمیں اس سے اُوپر آنا پڑے گا۔

  • اِس وقت آپ کی دلچسپی کا مرکز کیا ہے؟

  • طاہر چوہدری: میں کولنری میں تعلیم کی فراہمی کے لئے ایک ادارہ قائم کرنا چاہتا ہوں۔

  • ہفتے میں صرف 2 دن پروگرام کرنے کی کیا وجہ ہے؟

  • طاہر چوہدری: جس وقت "کُوکنگ آن آ بجٹ" شروع ہوا اُس وقت میں نوکری کررہا تھا اور میرے پاس ہفتے میں صرف 2 ہی دن کا وقت تھا بعدازاں یہ سلسلہ چل پڑا تو بھر تبدیلی نہیں آئی۔

  • آپ کو کس شیف نے بہت زیادہ متاثر کیا؟

  • طاہر چوہدری: نیویارک کے انتہائی نامی گرامی چائینیز شیف "چن ہاک" نے مجھے متاثر کیا ہے۔ خوش قسمتی سے مجھے ان کے ساتھ کام کرنے کا موقع ملا۔ ایک  ہوٹل میں وہ ایگزیکٹو شیف تھے اور میں شیف ڈی کوزین تھا۔ وہ سخت محنت کے قائل تھے، اس لئے مجھے ان کے ساتھ کام کرکے مزہ آیا، علاوہ ازیں شیف اکرام جو سند یافتہ تو نہیں ہیں لیکن ان کا تعلق حکماء کے خاندان سے ہے۔

  • کون سی بات افسردہ کر دیتی ہے؟

  • طاہر چوہدری: مجھے یہ کہتے ہوئے بہت دُکھ ہوتا ہے کہ پاکستان میں کوئی بھی سند یافتہ شیف نہیں ہے۔ انڈیا بھی ہمارے ساتھ ہی آزاد ہوا لیکن اس نے او برائے یونیورسٹی سے دنیا بھر کو سند یافتہ شیفس فراہم کئے۔

  • اپنی پسندیدہ عادت؟

  • طاہر چوہدری: آپ میری طاقت بھی کہہ سکتے ہیں اور کمزروی بھی کہ میں کبھی اپنے کام سے مطمئن نہیں ہوتا، خوب سے خوب تَر کی تلاش میں رہتا ہوں، اچھے سے اچھا کرنے کی سعی کرتا ہوں اور بہتری کی ہمیشہ گنجائش رکھتا ہوں۔

  • والدہ کے ہاتھ کی کون سی ڈِش سب سے زیادہ اچھی لگتی ہے؟

  • طاہر چوہدری: بھنڈی، بطور خاص کریلا بھنڈی اَمّی بہت مزے کی بناتی ہیں۔

  • آپ کو کتب بینی کا شوق ہے؟

  • طاہر چوہدری: بہت زیادہ، رات کو گھر آکر میں کوئی نہ کوئی کتاب ضرور پڑھتا ہوں۔ تاریخ، ثقافت اور کھانا پکانے کی کتابیں میرا انتخاب ہوتی ہیں۔ کھانا پکانے کے حوالے سے ایک کتاب "کمپلیٹ گائیڈ ٹوکو کری" مجھے بہت پسند ہے۔

  • اگر شیف نہ ہوتے تو؟

  • طاہر چوہدری: اگر شیف نہ ہوتا تو یقیناً دندان ساز ہوتا اور ایک بہت اچھا دندان ساز ہوتا۔

  • دن میں کتنے گھنٹے کام کرتے ہیں؟

  • طاہر چوہدری: 1990ء سے لے کر آج تک میں دن میں 13 سے 16 گھنٹے کام کرتا ہوں۔

  • گھر والوں کے لئے کتنا وقت نکالتے ہیں؟

  • طاہر چوہدری: جتنا فارغ وقت مِلتا ہے وہ میں اپنے گھر والوں کے ساتھ ہی گزارنا پسند کرتا ہوں۔

  • کِن ریسٹورنٹس کے کھانے پسند ہیں، باہر جا کر کیا کھانا پسند کرتے ہیں؟

  • طاہر چوہدری: میری پسندیدہ ڈِش گرل (grill) کر ہوئی مچھلی اور ہرے پتے ہیں۔

  • آپ کی وجہ شہرت؟

  • طاہر چوہدری: میرا پروگرام "لاکوچینا LaCucina" جس نے مجھے عام سے خاص بنا دیا۔

  • کن چیزوں کا شوق ہے؟

  • طاہر چوہدری: مجھے شروع سے اچھے برتنوں میں کھانا کھانا اور بڑے اور خوبصورت گلاس میں پانی پینا اچھا لگتا ہے، اس کے علاوہ مجھے کتابیں پڑھنے کا بے شوق ہے۔

  • آپ کے خیال میں ہر باورچی خانے کے لئے لازمی چیزیں کیا ہیں؟

  • طاہر چوہدری: کم مگر اچھے برتن، چھوٹی اور بڑی دیگچیاں اور نان اسٹک کے برتن باورچی خانے میں ضرور ہونے چاہئے، اِس کے علاوہ اپنے گھر میں "تارہ گرم مصالحہ" ضرور رکھیں۔

  • کوئی خواہش؟

  • طاہر چوہدری: میری دُعا ہے کہ الّلہ مجھے اِتنا دے کہ میں اپنے مُلک کے عوام کے لئے کچھ کر سکوں۔ اپنے لوگوں کے لئے کچھ کرنے کی خواہش کے پیش نظر ہی مَیں نے "لزارو" کی بنیاد ڈالی ہے۔ نیّت میری اچھی ہے، اب دیکھئے کہ نتیجہ کیا نکلتا ہے۔

  • کامیابی کا کلیہ؟

  • طاہر چوہدری: میں سمجھتا ہوں کہ میرے ساتھ الّلہ کی مدد ہے کہ ایک عام سا انسان آج 17 کروڑ عوام میں مقبول ہے۔ یہاں تک پہنچنے میں میری لگن، والدین کی دُعائیں اور مصالحہ کی محنت سب کچھ شامل ہے۔

More related articles to Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں:

  • Thanks for reading our artilcle about "Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں" filed under Chefs and Experts articles. one of thousands of originally written Articles published exclusively at khanaPakana.com.

Tried out this recipe? Let us know how you liked it?

Pleasebe judicious and courteous in selecting your words.

Name:
Email:

 
Submit your comments

Comments posted by users for Chef Tahir Chaudhry Says, I Wanted To Get Good Food for Everyone ہر شخص تک اچھا کھانا پہنچانا چاہتا ہوں

Featured Brands


Payment Methods
Secure Online Shopping